ابتدا عشق میں یوں ہوا دل خراب آدھا

ابتدا عشق میں یوں ہوا دل خراب آدھا
کے جیسے سیکھ پر چڑھتے ہی جل جائے کباب آدھا

لگتا ہے میرے محبوب کی ہے ایک آنکھ غائب
کے جب بھی اُلٹتا ہے، اُلٹتا ہے نقاب آدھا

ابتدا عشق میں یوں ہوا دل خراب آدھا
کے جیسے سیکھ پر چڑھتے ہی جل جائے کباب آدھا

لگتا ہے میرے محبوب کی ہے ایک آنکھ غائب
کے جب بھی اُلٹتا ہے، اُلٹتا ہے نقاب آدھا

For more update poetry visit at: urdupoetryy.com

Leave a Comment